بولی ووڈ کنگ شاہ رخ خان بڑی مشکل میں پھنس گئے، ان کی فلم ZERO کے خلاف ممبئی ہائی کورٹ میں درخوست دائر

ممبئی ہائی کورٹ میں فلم ’زیرو‘ کے خلاف سماعت کے موقع پر شاہ رخ خان کے پروڈکشن ہاؤس ’ریڈ چلیز انٹرٹینمنٹ‘ کی ٹیم نے فلم پر لگے الزامات کے دفاع میں کہا کہ سکھ برادری کی دائر کردہ درخواست مکمل طور پر ایک غلط فہمی پر مبنی ہے کیوں کہ فلم کے پوسٹر میں شاہ رخ خان کرپان نہیں بلکہ عام سی تلوار پہنے ہوئے ہیں جس کا کسی بھی مذہب سے کوئی تعلق نہیں۔

فلم سازوں نے کہا کہ انہوں نے اس فلم کے ذریعے کسی برادری یا معاشرے کے کسی طبقے کی بے عزتی نہیں کی اور نہ ہی کرپان کا استعمال کیا جو خالصہ کے لیے ایک مقدس علامت ہے۔

واضح رہے کہ دلی کے سکھ گردوارے کی انتظامی کمیٹی نے شاہ رخ خان اور آنند لعل رائے پر الزام عائد کیا تھا کہ انہوں نے فلم کے ٹریلر اور پوسٹر میں سکھوں کے روایتی کرپان کو ایک عام چاقو کی طرح پہنا ہوا ہے جس سے سکھوں کے جذبات مجروح ہوئے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں